Pani ka Zaiqa

 

پانی کی تاسیر ٹھنڈی کہی جاسکتی ہے مگر ا’سکے ذائقے کو الفاظ میں بیان کرنا یا کوئی نام دینا بہت مشکل ہے ۔جسطرح درد کی وضاحت مکمل طور پہ نہیں ہوتی، جیسے مہبت کی انتہا کو بتاتے ہوئے الفاظ کم پڑ جاتے ہیں بلکل اُسی طرح پانی کا ذائقہ الفاظوں کو مات دے دیتا ہے ۔ شدتِ پیاس میں پانی کا زائقہ ذیادہ محسوس ہوتا ہے نہ میٹھا نہ نمکین ، نہ تُرش نہ کڑوا ایک عجیب سا ذائقہ جو پوری ذبان کو اپنے نشے میں ڈبو کر جب حلق سے نیچے اُترتا ہے تو اپنی ٹھنڈی تاسیر اور نشے سے جان ڈال دیتا ہے۔ یہ ذائقہ شراب سے ذیادہ دیر تک ذباں کو اپنی تاسیر اپنے نشے میں محو رکھتا ہے ۔

Advertisements